• Teya Dora

    Džanum

    Urdu translation

Share
Font Size
Urdu
Translation

Meri Jaan

(تمہید)
کوئی نہ چاہے، مری جاں
زندہ رہنے کو بھی نہیں
زخموں پہ مرے مرہم بننے کو
کوئی نہ چاہے مری جاں
 
(بند)
جوں ہی رات ہو، میں وہی خواب بننے لگتی ہوں،
اک صوفی سیاہ لباس لیے کھڑا ہو۔
آوازیں سمندر کو پکارہی ہوں۔
چارہ کوئی نہیں، نہ نجات کا راستہ ہو۔
 
(ازل کورس)
کوئی نہ چاہے، مری جاں، درد کوئی نہ سنبھالے
آنسوؤں سے چل آئے، مرے لیے سپرد ہوجائے۔
کوئی نہ چاہے درد کوئی نہ چاہے۔
تکیے پہ مرے، سکوں بستی نہیں، خواب مجھے ڈراتے ہیں۔
 
(کورس)
آخری اُڑان تک نہیں، قیامت تک بھی نہیں
قسمت مری لعنت ہے
اس روح کا آشیانہ نہیں، لہجہ اس آتما کا نہیں
سیاہ صبحیں جل رہی ہیں۔ بحرے مرے!
 
(عبد کورس)
بحرے مرے، بحرے مرے
بحرے مرے، بحرے مرے
بحرے مرے، بحرے مرے
بحرے مرے، بحرے مرے
 
(کورس)
آخری اُڑان تک نہیں، قیامت تک بھی نہیں
قسمت مری لعنت ہے
بحرے مرے، بحرے مرے
بحرے مرے
 
(اختتام)
کوئی نہ چاہے، مری جاں
زندہ رہنے کو بھی نہیں
زخموں پہ مرے مرہم بننے کو
کوئی نہ چاہے مری جاں
 
Serbian
Original lyrics

Džanum

Click to see the original lyrics (Serbian)

Comments